سعودی ایئرلائن کے آفس ایس او پیز کی دھجیاں اڑا دی گٸیں

لاہور ( محمداظہر مشتاق ) ڈیوس روڈ پر موجود سعودی ایئرلائن کے آفس ایس او پیز کی دھجیاں اڑا دی گٸیں۔ شہری سعودی ائیر لائن کے آفس دھکے کھانے پر مجبور سعودی ائیر لائن نے کرونا وائرس کی وبا کے پیش نظر ایئرلائن سروس بند ہونے پر جو انٹرنیشل ٹکٹ بند کی تھی ان کو رینیو کرنے کا کام شروع تو کر دیا لیکن اس پر عملہ کی غفلت اور لاپرواہی کا منہ بولتا ثبوت
یہ ہے کہ اتوار چھٹی کے روز دفتر کے باہر لگی لمبی لاٸنیں ہیں۔ آفس کے باہر شہریوں کو بھیڑوں کی طرح دھکے کھانے پر مجبور کردیا گیا۔
وہاں موجود شہریوں نے پاکستان نیوز TV سے بات کرتے ہوٸے بتایا کہ ہم تین دن سے دفتر کے چکر لگا رہے ہیں صبح سے آفس کے گیٹ پر آکر بیٹھے ہیں کوئی لائن نہیں گرمی میں یہاں پنکھے اور بیٹھنے کے کوئی خاطر خواہ انتظامات نہیں اس کے ساتھ ساتھ شہریوں کا یہ بھی کہنا تھا گرمی کی شدت زیادہ ہونے سے کچھ لوگ بیہوش بھی ہوئے لیکن یہ معاملات کب تک چلیں گے یہاں کوئی پینے کا پانی تک موجود نہیں دور دراز کے علاقوں سے آئی عوام دھکے کھاتی نظر آرہی ہے لہذا شہریوں کا کہنا ہے ہماری سعودی ائیر لائن کے افسران سے گزارش ہے اس پر نوٹس لیکر شہریوں کی آسانی اور کرونا سے بچاو کیلئے ٹکٹ کا رینیو کرنے کا سسٹم ٹھیک کیا جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں